بسم اللہ الرحمن الرحیم

قومی

آرمی چیف سے ایرانی وزیر خارجہ کی ملاقات۔ دو طرفہ باہمی تعلقات کو فروغ دینے پر زور

آرمی چیف جنرل عاصم منیر سے ایرانی وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان کی ملاقات ہوئی جہاں پاک-ایران دو طرفہ باہمی تعلقات کو فروغ دینے پر زور دیا گیا ہے۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق جنرل ہیڈ کوارٹرز راولپنڈی میں ہونے والی ملاقات میں تعلقات کو مزید مضبوط کرنے اور ساتھ ہی ایک دوسرے کی تشویش کو سمجھنے کی ضرورت پر اتفاق کیا گیا۔

اس موقع پر آرمی چیف جنرل عاصم منیر کا کہنا تھا کہ خودمختاری اور جغرافیائی سرحدوں کا احترام کیا جانا چاہیے۔دونوںجانب سے اس بات پر بھی اتفاق کیا گیا کہ دہشت گردی دونوں ممالک کے لیے مشترکہ خطرہ ہے۔اس سے قبل حسین امیر عبداللہیان نے پاکستانی وزیر خارجہ جلیل عباس جیلانی کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان اور ایران دہشت گردوں کو کوئی موقع نہیں دیں گے، دہشت گردوں نے ایران کوبہت نقصان پہنچایا، بارڈر پر موجود دہشت گرد دونوں ممالک کی سلامتی کےلیے خطرہ ہیں۔انہوں نے کہا کہ مذاکرات کے دوران دہشت گردی کے خلاف اقدامات پر گفتگو ہوئی، بارڈر پر موجود تجارتی  مراکز کو فعال کرنے پر بھی بات چیت ہوئی۔

مزید پڑھیے  حکومتی رکن قومی اسمبلی اقبال آفریدی کی بدتمیزی، ہسپتال کے عملے نے کام بند کردیا
Back to top button