بسم اللہ الرحمن الرحیم

کھیل

پی سی بی کا کشمیر پریمیئر لیگ میں مداخلت کرنے پر بی سی سی آئی کیخلاف کارروائی کا اعلان

بی سی سی آئی نے ایک بار پھر آئی سی سی ممبران کے اندرونی معاملات میں مداخلت کرکے بین الاقوامی اصولوں اور جینٹل مین گیم کے کھیل کے جذبے کی خلاف ورزی کی،پی سی بی

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے ان رپورٹس پر برہمی کا اظہار کیا ہے کہ بورڈ آف کنٹرول فار کرکٹ ان انڈیا (بی سی سی آئی) نے آئی سی سی کے متعدد ممبروں کو بلا کر انہیں کشمیر پریمیئر لیگ (کے پی ایل) سے اپنے ریٹائرڈ کرکٹرز کو واپس بلانے پر مجبور کیا ہے۔ پی سی بی کا خیال ہے کہ بی سی سی آئی نے ایک بار پھر آئی سی سی ممبران کے اندرونی معاملات میں مداخلت کرکے بین الاقوامی اصولوں اور جینٹل مین گیم کے کھیل کے جذبے کی خلاف ورزی کی ہے کیونکہ پی سی بی نے کے پی ایل کی منظوری دے دی ہے۔

پی سی بی سمجھتا ہے کہ بی سی سی آئی نے آئی سی سی ممبران کو کرکٹ سے متعلقہ کام کے لیے بھارت میں داخلے کی اجازت نہ دینے کی دھمکی دے کر وارننگ جاری کرتے ہوئے اپنے ریٹائرڈ کرکٹرز کو کشمیر پریمیئر لیگ میں شرکت سے روک کر کھیل کو بدنام کیا ہے ۔

بی سی سی آئی کی جانب سے اس طرح کا سلوک سپرٹ آف کرکٹ کی پیشکش کے خلاف مکمل طور پر ناقابل قبول ہے اور ایک خطرناک رحجان رکھتا ہے جسے نہ تو برداشت کیا جا سکتا ہے اور نہ ہی نظر انداز کیا جا سکتا ہے۔ پی سی بی کا کہنا ہے کہ وہ اس معاملے کو آئی سی سی کے مناسب فورم پر اٹھائے گا اور آئی سی سی چارٹر میں اپنے لیے دستیاب مزید کوئی بھی کارروائی کرنے کا حق محفوظ رکھتا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

Back to top button