بسم اللہ الرحمن الرحیم

قومی

غزہ کی پٹی پر اسرائیلی بربریت تاحال جاری ہے،مزید 5فلسطینی شہید

شہادتوں کی تعداد 200 تک پہنچ گئی ہے، اسرائیلی بمباری سےمرنےوالوں میں 58 بچےاور34 عورتیں بھی شامل

اسرائیل نے فلسطین پر حملے بڑھا دئے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق غزہ کی پٹی پر اسرائیلی بربریت تاحال جاری ہے، اسرائیل کے متعدد فضائی حملوں کے نتیجے میں مزید 5 فلسطینیوں کو شہید کر دیا گیا۔ جس کے بعد شہادتوں کی تعداد 200 تک پہنچ گئی ہے، اسرائیلی بمباری سےمرنےوالوں میں 58 بچےاور34 عورتیں بھی شامل ہیں۔

عرب میڈیاکے مطابق اسرائیل کی جانب سے غزہ پر کم از کم 70 فضائی حملے کیے گئے اورشہری آبادیوں پربمباری کی ۔ یہ 2014ء میں ہونے والے بمباری کے بعد غزہ کا سب سے زیادہ شدید فضائی حملہ بتایا جاتا ہے۔ آج صبح کیے گئے حملوں کے اہداف میں فلسطینی سرزمین کے متعدد فوجی اورحفاظتی اڈے شامل تھے۔ غزہ کے وسط میں 4 منزلہ عمارت پربھی بمباری کی گئی۔

ملبے سے کئی بچوں کی لاشیں نکالنے کے لرزہ خیز مناظر سامنے آئے، ایک بچی 24 گھنٹوں بعد زندہ نکال لی گئی۔ گزشتہ روزبھی رہائشی عمارتوں پرحملے کیے گئے تھے جن کے نتیجے میں42 افرادشہید ہوئےتھے۔ واضح رہے کہ 10 مئی سے اسرائیل اور فلسطین کے درمیان کشیدگی شدت اختیار کر گئی ہے۔ ایک اندازے کے مطابق اب تک 487 افراد زخمی اور ہزاروں بےگھر ہو چکے ہیں۔

یاد رہے کہ بیت المقدس میں اسرائیلی پولیس اور فلسطینی شہریوں میں تازہ جھڑپوں کی ابتدا اس وقت ہوئی تھی جب مشرقی بیت المقدس میں یہودی آبادکاروں کی جانب سے وہاں بسنے والے چند فلسطینی خاندانوں کو بےدخل کرنے کی کوشش کی گئی۔ یاد رہے کہ گذشتہ روز اسلامی تعاون تنظیم (او آئی سی) کے وزرائے خارجہ کے اجلاس میں فلسطین کے حق میں اور اسرائیلی مظالم کے خلاف قرارداد منظور کرلی گئی تھی۔
سعودی عرب کی درخواست پر فلسطین کی صورتحال پر او آئی سی وزرائے خارجہ کا ہنگامی اجلاس طلب کیا گیا تھا جس میں اسرائیلی حملوں اور فلسطین کی صورتحال کا جائزہ لیا گیا۔ 57 اسلامی ملکوں کی نمائندہ تنظیم او آئی سی نے نہ اقتصادی بائیکاٹ کی بات، نہ کسی اور ایکشن کا مطالبہ کیا بلکہ فلسطین پر اسرائیلی بمباری اور وحشیانہ حملوں کو ایک روایتی قرار داد منظور کرکے نمٹا دیا تھا۔

یہ بھی پڑھیے

Back to top button