بسم اللہ الرحمن الرحیم

قومی

سعودی عرب نے تمام سفری پابندیاں اٹھا لیں

تمام ایئرپورٹس، بندرگاہیں اور سرحدی چوکیاں سعودی شہریوں کے لیے کھول دی گئی ہیں

سعودی عرب میں آج سے سفری پابندیاں اٹھا لی گئی ہیں تمام ایئرپورٹس، بندرگاہیں اور سرحدی چوکیاں سعودی شہریوں کے لیے کھول دی گئی ہیں. ریاض کے کنگ خالد ایئر پورٹ سے پہلی پرواز رات ایک بجے کے بعد روانہ ہوئی ہے محکمہ پاسپورٹ نے بیان میں کہا ہے کہ وہی سعودی سفر کرسکیں گے جو کورونا ویکسین کی دونوں خوراکیں لے چکے ہوں.

ایک خوراک لینے والے وہ افراد بھی سفر کرنے کے اہل ہیں جو پہلی خوراک لینے کے بعد14 دن گزار چکے ہوں کورونا وائرس سے صحت یاب ہونے والوں کو بھی سفر کی اجازت ہوگی.اٹھارہ برس سے کم عمر کے سعودی شہریوں کو سفر کی مشروط اجازت ہے سعودی محکمہ ہوابازی نے شہریوں کو ہدایت کی ہے کہ پرواز سے بہت پہلے ایئر پورٹ پہنچ جائیں. ایئرپورٹ صرف سفر کرنے والے ہی جا سکتے ہیں غیر مسافروں کو ایئرپورٹ کی عمارت میں داخل ہونے کی اجازت نہیں ہو گی البتہ معذور مسافروں کے ہمراہی مستثنی ہوں گے.

حکام کا کہنا ہے کہ ایک اندازے کے مطابق پابندیاں ختم ہونے کے ساتھ سعودی عرب سے لگ بھگ ایک لاکھ سعودی احتیاطی تدابیر کے ساتھ بیرون ملک کا سفر کریں گے. ایئر پورٹس ویکسین لگوانے والوں کے کاؤنٹر الگ ہوں گے سعودی عرب کے9 ایئر پورٹس سے ایک دن میں 385 پروازیں چلائے جانے کی توقع ہے ان میں جدہ ایئرپورٹ سے 75 پروازیں، ریاض سے 225 اور دمام ایئرپورٹ سے 66 پروازیں روانہ ہوں گی.

قبل ازیں سعودی وزارت داخلہ نے کہا تھا کہ بین الاقوامی سفر کی بحالی کے باوجود کورونا سے متاثرہ ممالک میں بغیر پیشگی اجازت کے سفر کی اجازت نہیں ہو گی وزارت داخلہ کا کہناتھا کہ ایسے ممالک جہاں پر وبا تیز ہے وہاں پر سفر کی اجازت نہیں ہوگی تاہم صرف ناگزیر حالات میں سفر کی اجازت مل سکتی ہے. وزرات داخلہ نے بیرون ملک سفر کے لیے 13 ایسے ممالک کی نشاندہی کی ہے جہاں پر شہریوں کو جانے کی اجازت نہیں ان ممالک میں لیبیا، شام، لبنان، یمن، ایران، ترکی، آرمینیا، صومالیہ، جمہوریہ کانگو، افغانستان، وینز ویلا، روس اور بھارت شامل ہیں ان ممالک میں کورونا وبا موجود ہے اور اس پر قابو نہیں پایا جاسکا ہے.

یہ بھی پڑھیے

Back to top button