بسم اللہ الرحمن الرحیم

قومی

وزیراعظم ایک غلط چیز پر جاہلانہ انداز میں کھڑے ہیں،مولانا فضل الرحمان

پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) اور جمعیت علمائے اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ لیفٹیننٹ جنرل آرمی چیف کے حکم کا پابند ہے جبکہ وزیراعظم ایک غلط چیز پر جاہلانہ انداز میں کھڑے ہیں۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو میں مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھاکہ لمحہ بہ لمحہ صورتحال بدل رہی ہے، بڑی عقلمندی سے ان حالات سے نکلنا ہوگا۔

ان کا کہنا تھاکہ آئین کے مطابق فیصلے کریں گے تو مشکل پیش نہیں آئے گی، فکر اس بات کی ہے کہ ملک کو کوئی نقصان نہ پہنچے۔

موجودہ صورتحال پر مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھاکہ فوج واحد منظم ادارہ ہے جو پاکستان کی واحد امید ہے۔

ان کا کہنا تھاکہ لیفٹیننٹ جنرل آرمی چیف کے حکم کا پابند ہے، یہ اختیار اس حد تک نہیں کہ کوئی اس پر ڈٹ جائے، وزیراعظم ایک غلط چیز پر جاہلانہ اندازمیں کھڑے ہیں۔

سربراہ اتحاد کا کہنا تھاکہ لیفٹیننٹ جنرل آرمی چیف کے ماتحت ہے، وزیراعظم کو اس حد تک مداخلت نہیں کرنی چاہیے کہ نظام متاثر ہو، تمام معاملات مشاورت کے ساتھ چلتے ہیں۔

ان کا کہنا تھاکہ مشکلات اسی وجہ سے آئیں کہ پارلیمنٹ میں فوج اور فوج کے کام میں کسی اور نے مداخلت کی۔

حکومت پر کڑی تنقید کرتے ہوئے فضل الرحمان کا کہنا تھاکہ ملک پر مسلط لوگوں سے قوم کو آزاد کرانا چاہتےہیں، یہ حکمران پاکستان کو ڈبونے کیلئے آئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

Back to top button