بسم اللہ الرحمن الرحیم

علاقائی

ضلع مہمند کے ایک گھرانے کی ساس بہو بلدیاتی الیکشن میں امیدوار

خیبر پختونخوا کے ضلع مہمند کے ایک گھرانے کی ساس بہو بلدیاتی الیکشن میں امیدوار بن گئيں۔

فاٹا انضمام کے بعد ضلع مہمند میں پہلی بار بلدیاتی انتخابات کا انعقاد ہونے جا رہا ہے جہاں مرد امیدواروں کے ساتھ ساتھ خواتین بھی اس الیکشن میں بھرپور حصہ لے رہی ہیں۔ 

ایک دلچسپ صورتحال لوئر سب ڈویژن کے ایک گھر میں دیکھی جارہی ہے جہاں ساس اور بہو دو الگ الگ ویلیج کونسلز سے خواتین کی نشستوں پر الیکشن لڑ رہی ہیں۔

یہ دونوں خواتین گھر گھر جا کر بھر پور انتخابی مہم چلا رہی ہیں۔ ویلیج کونسل ترکزئی 3 سے عوامی نیشنل پارٹی کی اُمیدوار 65 سالہ دنیا بی بی ساس بھی ہیں اور  ان کا مشن معاشرے کے کمزور طبقے کے مسائل حل کرنا ہے۔

4 بچوں کی ماں 35 سالہ رابعہ بی بی اس گھرانے کی بہو ہیں اور وہ ویلیج کونسل ترکزئی 2 سے آزاد حیثیت سے انتخابات میں حصہ لے رہی ہیں۔

 اُن کا کہنا ہے کہ انتخابات میں حصہ لینے کا مقصد مسائل و مشکلات سے پریشان خواتین کے حقوق کیلئے آواز اُٹھانا ہے۔

دونوں ساس بہو انتخابی مہم میں بھی ایک دوسرے کی مدد کرتی ہیں اور کھاناپکانے، برتن دھونے اوردیگرگھرکےکاموں میں ایک دوسر ےکا ہاتھ بٹاتی ہیں۔

بلدیاتی انتخابات میں ضلع مہمند کے 65 ویلیج کونسلز سے 155 خواتین اُمیدوار میدان میں ہیں اور یہاں کی باہمت خواتین عوامی مسائل کے حل اور علاقے کی ترقی کیلئے مردوں کے شانہ بشانہ کھڑی ہونے کیلئے تیار ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

Back to top button