بسم اللہ الرحمن الرحیم

قومی

ن لیگ کا آزاد کشمیر الیکشن نتائج کیخلاف قومی و بین الاقوامی تحریک چلانے کا اعلان

آزاد کشمیر الیکشن میں امیدوارو ں کو بلاکر کہا گیا کہ وفاداری بدل لو، دباؤ اور لالچ کے باوجود ہمارے امیدوار کھڑے رہے، شاہد خاقان عباسی

مسلم لیگ ن کے آزاد کشمیر الیکشن کے نتائج کو مسترد کرکے قومی بین الاقوامی سطح پر تحریک چلانے کا اعلان کردیا،ن لیگ کے سینئر نائب صدر شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ ڈمی وزیراعظم لاکر صوبہ بنانے کوکشمیری عوام قبول نہیں کریں گے،پی ٹی آئی کو پیسے اور فراڈ کا ووٹ ملاجوکشمیرکی سیاسی روایات پر حملہ ہے۔

مسلم لیگ ن کے سینئر نائب صدر شاہد خاقان عباسی اور راجا فاروق حیدر پارٹی رہنماؤں کے ہمراہ پریس کانفرنس کررہے تھے، شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ دھاندلی کا معاملہ الیکشن کے دن نہیں الیکشن سے پہلے شروع ہوگیا تھا، آزاد کشمیر الیکشن میں امیدوارو ں کو بلاکر کہا گیا کہ وفاداری بدل لو، دباؤ اور لالچ کے باوجود ہمارے امیدوار کھڑے رہے، مسلم لیگ ن نے الیکشن میں دوسری جماعتوں سے بڑے جلسے کیے، انتخابی نتائج ہماری انتخابی مہم کی عکاسی نہیں کرتے،جو دھاندلی کے معاملات 2018کے الیکشن میں ہوئے وہی آج 2021ء میں ہوئے ہیں، آزاد کشمیر کی سیاسی ماحول اور روایات پر حملہ کیا گیا، جس کا ہمیں خدشہ تھا وہی بات ہوئی، ڈونلڈ ٹرمپ نے وعدہ کیا تھا کہ میں ثالثی کروں گا، جو وزیراعظم نے ورلڈکپ جیتنے کے مترادف کہا تھا،امریکا اور بھارت سے جو بات کی گئی وہ مسئلہ کشمیر کے حل سے انحراف ہے، وہی بات آج نظر آئی ہے، آج آزاد کشمیر میں ڈمی وزیراعظم لاکر صوبہ بنانے کی جو باتیں کی جارہی ہیں، جونیا راستہ کھولنے کی بات ہے وہ اقوام متحدہ کی قراردادوں کی نفی ہے، کشمیر کاز کو کھونے کے مترادف ہے، یہ کشمیری عوام کو قبول نہیں ہے،کسی بھی سیاسی جماعت سے تعلق رکھنے والا کشمیری اس کو تسلیم نہیں کرے گا،اقتدار میں ایسے لوگوں کو لایا جارہا ہے جو پیسے کے بل بوتے پر آنا چاہتے ہیں، غیرنمائندہ حکومت کس طرح کشمیر کاز کو آگے بڑھائے گی؟حقیقت میں 25 جولائی کو آزاد کشمیر میں جمہوریت ہاری ہے۔

مسلم لیگ ن کے رہنماء راجہ فاروق حیدر نے کہا کہ وزیراعظم نے آزاد کشمیر الیکشن میں آئین ، حکومت ، آئینی اداروں کے ساتھ کھلواڑ کیا ہے،اگر چیزیں سامنے لاؤں تو ہندوستانی ٹی وی بھی دکھائے گا، جس سے ہمارے اپنے ہی کپڑے اتریں گے،میں سارے الیکشن بارے بتاسکتا ہوں کہ کس الیکشن میں کیا ہوا،یہ کیا الیکشن ہے؟ یہ پیسے کا الیکشن ہے، پیسے کی بنیاد پر آپ لوگوں کا ایمان خریدتے ہیں، یہ پیسے اور فراڈ کا ووٹ ہے،ہم کوئی بھیڑ بکریاں تو نہیں ہیں، پوری دنیا کو عمران خان کا چہرہ دکھانے کیلئے قومی بین الاقوامی سطح پر تحریک چلاؤں گا، الیکشن مذاق نہیں ہے کہ ڈرا دھمکا کر ایمان خریدا جائے۔مہاجر کیمپ میں لوگوں کو پیسے دیے گئے۔

یہ بھی پڑھیے

Back to top button