بسم اللہ الرحمن الرحیم

قومی

کمشنر راولپنڈی کے الزامات، الیکشن کمیشن کی تردید، انکوائری کرانے کا فیصلہ

الیکشن کمیشن نے کمشنر راولپنڈی ڈویژن لیاقت علی چٹھہ کے الیکشن میں دھاندلی کے الزامات کی سختی سے تردید کر دی۔کمشنر راولپنڈی ڈویژن کی پریس کانفرنس پر ردعمل دیتے ہوئے ترجمان الیکشن کمیشن نے تمام تر الزامات کی تردید کی اور کہا کہ چیف الیکشن کمشنر یا الیکشن کمیشن کے کسی عہدیدار نے الیکشن نتائج کی تبدیلی کیلئے کمشنر راولپنڈی کو کبھی کوئی ہدایات جاری نہیں کیں۔ترجمان الیکشن کمیشن کا کہنا تھا کسی بھی ڈویژن کا کمشنر ڈی آر او،آر او یا پریذائیڈنگ آفیسر نہیں ہوتا، نہ ہی کمشنر کا الیکشن کے کنڈکٹ میں کوئی براہ راست کردار ہوتا ہے، الیکشن کمیشن اس معاملے کی جلد از جلد انکوائری کرائے گا۔

یاد رہے کہ کمشنر راولپنڈی لیاقت علی چھٹہ نے راولپنڈی کرکٹ اسٹیڈیم میں پی ایس ایل کی تیاریوں کے حوالے سے کی جانے والی پریس کانفرنس کے دوران عام انتخابات میں سنگین بے ضابطگیوں کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا انہوں نے انتخابات میں ہارے ہوئے امیدواروں کو 50، 50 ہزار کی لیڈ سے جتوا کر قوم کے ساتھ بہت زیادتی کی، ضمیر کی آواز پر عہدے سے استعفیٰ دیتا ہوں۔لیاقت علی چٹھہ نے الزام عائد کیا کہ اس کام میں الیکشن کمیشن، چیف الیکشن کمشنر اور چیف جسٹس پاکستان بھی ملوث ہیں، ان لوگوں کو بھی عہدوں سے مستعفی ہو جانا چاہیے۔

Back to top button