بسم اللہ الرحمن الرحیم

قومی

این اے 249،دوبارہ گنتی میں بھی پیپلزپارٹی کی جیت

دوبارہ گنتی کی درخواست تین روز تک جاری رہی۔

این اے 249 ضمنی الیکشن، ووٹوں کی دوبارہ گنتی میں بھی ن لیگ کو شکست۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان مسلم لیگ ن کو تمام تر کوششوں کے باوجود کراچی کے قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 249 ضمنی الیکشن میں شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار مفتاح اسماعیل کی طرف سے این اے 249 میں دوبارہ گنتی کے لیے درخواست دائر کی گئی تھی، دوبارہ گنتی کی درخواست تین روز تک جاری رہی۔

مسلم لیگ ن، پی ایس پی اور تحریکِ انصاف، ایم کیو ایم اور 2 آزاد امیدواروں نے بھی گنتی کے عمل کا بائیکاٹ کیا تھا۔ سیاسی جماعتوں کے بائیکاٹ کے باوجود گنتی کا عمل بلا تعطل جاری رہا۔ تمام 276 پولنگ اسٹیشنز کے ووٹوں کی دوبارہ گنتی مکمل ہونے کے بعد پیپلز پارٹی کے ووٹوں میں مزید اضافہ ہوگیا۔دوبارہ گنتی کے دوران پاکستان پیپلز پارٹی کے امیدوار قادر مندوخیل 15ہزار656 ووٹ لیکر کامیاب ہوئے، جبکہ ن لیگ کے مفتاح اسماعیل نے14ہزار747 ووٹ حاصل کیے۔

پیپلز پارٹی کے امیدوار نے 909 ووٹوں سے ضمنی الیکشن جیت لیا۔ اس سے قبل 29اپریل کو ہوئی پولنگ کے دوران پیپلزپارٹی کےقادر مندوخیل 683ووٹوں سے کامیاب ہوئے تھے۔ دوبارہ گنتی کے دوران بیشتر امیدواروں کے ووٹ مسترد بھی ہوئے۔ الیکشن کمیشن کے مطابق دوبارہ گنتی کے دوران پیپلزپارٹی کے قادرخان مندوخیل 500ووٹ ، ن لیگ مفتاح اسماعیل کے726 ووٹ، پی ایس پی کے مصطفی کمال کے499 ووٹ، کالعدم ٹی ایل پی کے457 ووٹ، متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان کے حافظ مرسلین کے 504 ووٹ، جبکہ پاکستان تحریک انصاف کے امیدوار امجد آفریدی کے241ووٹ مسترد ہوئے۔ اس ضمنی الیکشن میں فتح کے بعد قومی اسمبلی میں پیپلز پارٹی کی نشستوں میں اضافہ ہو گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیے

Back to top button