بسم اللہ الرحمن الرحیم

قومی

مشکل وقت میں ساتھ کھڑے ہونے پر سعودی عرب کے شکرگزار ہیں، صدر مملکت

صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ پاکستان سعودی عرب کے ساتھ موجودہ تعلقات کو طویل المدتی تزویراتی اور اقتصادی شراکت داری میں تبدیل کرنا چاہتا ہے۔اسلام آباد میں سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان السعود کی قیادت میں سعودی وفد سے گفتگو کرتے ہوئے صدر مملکت نے کہا کہ پاکستان اور سعودی عرب کے درمیان کئی دہائیوں پرانے تعلقات ہیں۔صدر مملکت نے کہا کہ پاکستان کی حکومت اور عوام حرمین شریفین کے متولی شاہ سلمان بن  عبدالعزیز آل سعود کا انتہائی احترام کرتے ہیں اور سعودی عرب کے ساتھ کھڑے رہیں گے۔

صدر مملکت نے کہا کہ اسلامی دنیا کی خوشحالی سعودی عرب کی ترقی سے وابستہ ہے۔ انہوں نے ولی عہد اور سعودی عرب کے وزیر اعظم محمد بن سلمان کی جرأت مندانہ اور دور اندیش قیادت اور ویژن 2030 کے تحت ہونے والی قابل ذکر پیش رفت کو سراہا۔آصف علی زرداری نے مشکل وقت میں پاکستان کا ساتھ دینے پر سعودی عرب  کی قیادت کا شکریہ بھی ادا کیا۔

سعودی وزیر خارجہ نے کہا کہ سعودی عرب پاکستان کے ساتھ اپنے تعلقات کو انتہائی اہم  سمجھتا ہے اور پاکستان کے ساتھ مضبوط شراکت داری کے لیے پرعزم ہے۔ انہوں نے اس بات پر روشنی ڈالی کہ دونوں ممالک مضبوط رشتوں سے لطف اندوز ہیں اور کئی دہائیوں سے ایک دوسرے کی مدد کر رہے ہیں۔ انہوں نے سعودی عرب  کی ترقی میں پاکستانی تارکین وطن کے تعاون کو سراہا۔

دونوں فریقوں نے دونوں برادر ممالک کے باہمی فائدے کے لیے مضبوط شراکت داری قائم کرنے اور اقتصادی تعاون کو مزید فروغ دینے کے عزم کا اعادہ کیا۔انہوں نے علاقائی حرکیات اور مشرق وسطیٰ میں حالیہ پیش رفت پر تبادلہ خیال کیا اور فوری اور غیر مشروط جنگ بندی اور غزہ میں اسرائیلی مظالم بند کرنے پر زور دیا۔دونوں اطراف نے دو طرفہ اہمیت کے امور اور امت مسلمہ کو درپیش چیلنجز پر بھی تبادلہ خیال کیا۔

مزید پڑھیے  پرویز ملک کے انتقال کے باعث خالی نشست پر ضمنی الیکشن کا شیڈول جاری
Back to top button