بسم اللہ الرحمن الرحیم

قومی

نگران وزیراعلیٰ پنجاب نے ٹرانس جینڈر بچوں کیلئے پہلے سکول ’تحفظ درسگاہ‘ کا افتتاح کردیا

پاکستان میں ٹرانس جینڈر بچوں کیلئے اپنی نوعیت کا پہلا سٹیٹ آف دی آرٹ سکول لاہور میں کھل گیا جہاں بچوں کو او لیول اور اے لیول کی تعلیم دی جائے گی۔نگران وزیراعلیٰ پنجاب سید محسن نقوی نے لاہور میں جلو پارک کے قریب ٹرانس جینڈر بچوں کیلئے پہلے سکول ’تحفظ درسگاہ‘ کا افتتاح کردیا۔ یہ سکول یو کے کریکلم اینڈ ایکریڈیشن بورڈ نے صرف 18 روز میں بنایا گیا ہے۔نگران وزیراعلیٰ نے اس موقع پر تحفظ درسگاہ کے کلاس رومز، ہاسٹل اور کمروں کے علاوہ دیگر شعبوں کا بھی معائنہ کیا۔ انہوں نے قلیل مدت میں سکول مکمل کرنے پر یو کے کریکلم اینڈ ایکریڈیشن بورڈ کی ٹیم کی کاکردگی کو سراہا، نگران وزیراعلیٰ کو تحفظ درسگاہ کے حوالے سے بریفنگ بھی دی گئی۔اس درسگاہ میں ٹرانس جینڈر بچوں کو محفوظ ماحول فراہم کرنے کے ساتھ ساتھ تعلیم اور ٹیکنیکل ٹریننگ بھی مہیا کی جائے گی۔نگران وزیراعلیٰ پنجاب سید محسن نقوی نے افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تحفظ درسگاہ کی عمارت بے شک چھوٹی ہے لیکن اس کا کام بہت بڑا ہے، 18 روز کے مختصر عرصے میں تحفظ درسگاہ تعمیر کرانے کا کریڈٹ ٹیم کو جاتا ہے

 

سال بھر ٹرانس جینڈر کمیونٹی کیلئے آئی جی پنجاب ڈاکٹر عثمان انور کی کاوشوں کو سراہتا ہوں۔انہوں نے مزید کہا کہ ڈاکٹر عثمان انور نے ٹرانس جینڈر کمیونٹی کیلئے سنٹرز قائم کئے اور روزگار سمیت کئی مواقع فراہم کیے، تحفظ درسگاہ کو چلانے والی پوری ٹیم سے کہوں گا کہ اس درسگاہ کو اس مقصد کیلئے وقف کریں جس کیلئے اسے قائم کیا گیا ہے۔وزیراعلیٰ محسن نقوی نے کہا کہ لوگ ٹرانس جینڈر کمیونٹی کے مسائل کو گھروں میں زیر بحث نہیں لاتے، اس کمیونٹی کے مسائل کے حل کیلئے تحفظ درسگاہ بنانے والی ٹیم نے عملی کام کا مظاہرہ کیا، اللہ تعالیٰ آپ کو اس  کی جزا دے گا۔اس موقع پر انسپکٹر جنرل پولیس، سی سی پی او، یوکے کریکلم اینڈ ایکریڈیشن بورڈ کے چیئرمین زاہد بھٹی اور ٹرانس جینڈر کمیونٹی کے افراد بھی موجود تھے۔

مزید پڑھیے  فلسطینیوں پر مظالم قابل مذمت، صدرعارف علوی
Back to top button