بسم اللہ الرحمن الرحیم

بین الاقوامی

ہمیں یقینی طور پر غزہ میں فوری جنگ بندی کی ضرورت ہے وزیر خارجہ بیلجیئم

بیلجیئم فلسطین تنازعے کے دو ریاستی حل پر مبنی مذاکرات  کی میزبانی کے لیے تیار ہے

بیلجیئم کی وزیر خارجہ خدجہ لا حبیب نے غزہ میں فوری جنگ بندی کا مطالبہ کرتے ہوئے دو ریاستی حل پر مبنی مذاکرات کا آغاز کرنے  والی  ایک بین الاقوامی امن کانفرنس کی میزبانی کے اپنے ارادے کا اعلان کیا ۔خدجہ لا حبیب  نے بیلجین  دارالحکومت برسلز کے میلسبروک فوجی ہوائی اڈے پر ایک تقریب سے خطاب  میں یہ اعلان کیا۔

فوجی طیارے کے ذریعے انسانی امداد کو فضا سے غزہ پہنچانے کے لیے اپنے ملک کے آپریشن کے بارے میں، لا حبیب نے کہا، “ہم غزہ میں جو کچھ دیکھ رہے ہیں وہ ایک انسانی المیہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں یقینی طور پر غزہ میں فوری جنگ بندی کی ضرورت ہے۔اس بات پر زور دیتے ہوئے کہ غزہ میں انسانی صورت حال سے نمٹنے کا مستقل راستہ دو ریاستی حل تک پہنچنا ہے، لاحبیب نے کہا، “ہم نے فلسطینی ریاست کو تسلیم کرنے  کے حوالے سے   بیلجیم میں علاقائی حکومتوں کے درمیان ایک معاہدہ کیا ہے ۔ ہم اس پر سنجیدگی سے غور کر رہے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ  بیلجیئم کی وفاقی حکومت فلسطینی ریاست کو تسلیم کرنے کے لیے “صحیح وقت” کا انتظار کر رہی ہے، “کیونکہ اگر بیلجیئم تنہا  ہی  ریاستِ فلسطین  کو تسلیم کرتا ہے، تو نتیجہ صرف ایک علامتی بیان ہو گا۔”

مزید پڑھیے  میزائل ٹیسٹ پر پابندیوں کی تجویز، شمالی کوریا نے اقوام متحدہ پر دہرے معیار کا الزام عائد کردیا
Back to top button