بسم اللہ الرحمن الرحیم

تجارت

پاکستان کی اشیا کی برآمدات میں مسلسل 6 مہینے سے اضافے کا رجحان جاری

پاکستان کی اشیا کی برآمدات میں مسلسل 6 مہینے سے اضافے کا رجحان جاری ہے، فروری میں سالانہ بنیادوں پر یہ 17.54 فیصد بڑھ کر 2 ارب 57 کروڑ ڈالر تک پہنچ گئیں، جو برآمدی صنعتوں کی نمو میں بحالی کا عندیہ ہے۔رپورٹ میں پاکستان ادارہ شماریات کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے حوالے سے بتایا گیا کہ مالی سال 2024 کے ابتدائی 8 ماہ کے دوران برآمدات 9 فیصد اضافے سے 20 ارب 35 کروڑ ڈالر ہوگئیں، جس کا حجم گزشتہ برس کے اسی عرصے کے دوران 18 ارب 67 کروڑ ڈالر رہا تھا۔

تجارتی خسارہ سالانہ بنیادوں پر 1.95 فیصد تنزلی کے بعد فروری میں ایک ارب 71 کروڑ ڈالر رہا، رواں مالی سال کے ابتدائی 8 ماہ کے دوران تجارتی خسارہ 30.18 فیصد کمی سے 14 ارب 87 کروڑ ڈالر پر آگیا، جو گزشتہ برس کے اسی عرصے کے دوران 21 ارب 29 کروڑ ڈالر ریکارڈ کیا گیا تھا۔عالمی مالیاتی ادارے (آئی ایم ایف) نے 3 ارب ڈالر قرض پروگرام ’اسٹینڈ بائی ارینجمنٹ‘ کے پہلے جائزے میں پاکستان کی برآمدات وزارت تجارت کے مالی سال 2028 تک 100 ارب ڈالر کے ہدف کے مقابلے میں نمایاں طور پر کافی کم رہنے کی توقع ظاہر کی ہے۔

آئی ایم ایف نے پیش گوئی کی ہے کہ پاکستان کی برآمدات بتدریج اضافے کے بعد مالی سال 2024 میں 30 ارب 84 کروڑ ڈالر، مالی سال 2025 میں 32 ارب 35 کروڑ ڈالر، مالی سال 2026 میں 34 ارب 68 کروڑ ڈالر مالی سال 2027 میں 37 ارب 25 کروڑ ڈالر اور مالی سال 2028 میں 39 ارب 46 کروڑ ڈالر ہو جائے گی۔

مزید پڑھیے  پیٹرول 26 روپے، ڈیزل 17روپے فی لیٹر مہنگا
Back to top button