بسم اللہ الرحمن الرحیم

کھیل

گراس روٹ سےایلیٹ ٹریننگ لیول تک توجہ دینے کی ضرورت ہے،لیفٹیننٹ جنرل(ر)عارف حسن

لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ سید عارف حسن نے تسلیم کیا ہےکہ ملک میں ٹیلنٹ نکھارنے کا کوئی سسٹم نہیں ہے۔

پاکستان اولمپک ایسوسی ایشن (پی او اے) کے صدر لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ سید عارف حسن نے تسلیم کیا ہےکہ ملک میں ٹیلنٹ نکھارنے کا کوئی سسٹم نہیں ہے۔

17 سال سے پی او اے کے عہدہ صدارت پر براجمان لیفٹیننٹ جنرل ریٹائرڈ سید عارف حسن نے نجی ٹی وی چینل سے گفتگو میں کہا کہ ملک میں ٹیلنٹ نکھارنے کا کوئی سسٹم نہیں یہ ماننے والی بات ہے، گراس روٹ سےایلیٹ ٹریننگ لیول تک توجہ دینے کی ضرورت ہے۔

عارف حسن کا کہنا تھا کہ 1992کے بعد سے کوئی میڈل پاکستان نہیں آیا، ملک بھر سے صرف 2 کھیلوں میں کھلاڑیوں نے کوالیفائی کیا۔

صدر پی او اے کا کہنا تھا کہ ارشدندیم کی بہت اچھی پرفارمنس رہی ہے،طلحہ طالب کا علم تھا کہ وہ بہت اچھا ویٹ لفٹر ہے، دونوں پر یقین تھا کہ یہ اولمپکس میں اچھی پوزیشن پرآئیں گے۔

خیال رہےکہ ٹوکیو اولمپکس میں پاکستان کوئی بھی میڈل حاصل کرنے میں ناکام رہا ہے۔

اس بار اولمپکس میں پاکستان کے صرف 10 ایتھلیٹس شریک تھے جوکہ کوئی بھی تمغہ حاصل نہیں کرسکے۔

یہ بھی پڑھیے

Back to top button