بسم اللہ الرحمن الرحیم

قومی

پی ٹی آئی وفد کی مولانا فضل الرحمان سے ملاقات، ساتھ چلنے کی دعوت دیدی

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے وفد نے جمعیت علماء اسلام (جے یو آئی) کے سربراہ  مولانا فضل الرحمان سے ملاقات کی جس میں  حالیہ انتخابات  اور  سیاسی صورت حال پر  بات چیت کی گئی، پی ٹی آئی نے عمر ایوب کو وزیراعظم کا ووٹ دینے کے لیے بھی حمایت مانگ لی۔اسلام آباد میں مولانا فضل  الرحمان سے ان کی رہائش گاہ پر  اسد قیصر کی سربراہی میں پی ٹی آئی وفد نے ملاقات کی، مولانا فضل الرحمان نے  پی ٹی آئی وفدکا خیر مقدم کیا۔

ملاقات میں حالیہ انتخابات اور سیاسی صورتحال پر بات چیت کی گئی، ملاقات میں حالیہ انتخابات میں مبینہ دھاندلی سمیت تحفظات پر بھی گفتگو ہوئی۔پی ٹی آئی وفد نے عمران خان کا پیغام مولانا فضل الرحمان تک پہنچایا، وفد نے انتخابات میں مبینہ دھاندلی اور اپوزیشن میں ساتھ چلنےکی دعوت دی۔

ذرائع کے مطابق پی ٹی آئی کی جانب سے حکومت سازی کے امور  پر  بھی تبادلہ خیال کیا گیا، پی ٹی آئی نے عمرایوب کی بطور  وزیر اعظم امیدوار کے لیے بھی حمایت مانگ لی۔اس سے قبل اڈیالہ جیل راولپنڈی کے باہر میڈیا سےگفتگو کرتے ہوئے اسدقیصرکا کہنا تھا کہ عمران خان نے تمام سیاسی جماعتوں کے ساتھ بات کرنےکا ٹاسک دیا ہے۔

 

اسدقیصرکا کہنا تھا کہ الیکشن میں دھاندلی کے خلاف احتجاج کرنے والی جماعتوں سے رابطہ کریں گے، جے یو آئی، اے این پی، جماعت اسلامی اور قوم پرست جماعتیں سب سے بات کریں گے۔گزشتہ روز پریس کانفرنس کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ  ہمارے پی ٹی آئی سے اختلافات رہے ہیں، ہمیں ان کے جسموں سےکوئی مسئلہ نہیں، ان کے دماغوں سے مسئلہ ہے، وہ ٹھیک ہوجائیں گے،اگر کوئی سمجھتا ہےکہ دھاندلی ہوئی تو ساتھ آجائے، اگر کوئی سمجھتا ہےکہ دھاندلی نہیں ہوئی تو وہ بیٹھ جائے اور عیاشی کرے۔

مزید پڑھیے  ارشد شریف قتل کیس کا از خود نوٹس، آج رات تک قتل کا مقدمہ درج کرنے کا عدالتی حکم
Back to top button