بسم اللہ الرحمن الرحیم

صحت

روانہ ایک امرود کھانے کے فوائد

امرود کا ذائقہ کس فرد کو پسند نہیں ہوگا؟چاٹ کی شکل میں کھائیں یا ویسے ہی اسے چبائیں امرود ہر فرد کو ہی پسند آتا ہے۔اس کی مہک ہی کھانے کی خواہش بڑھا دیتی ہے اور ناشپاتی کی شکل کا یہ پھل صحت کے لیے بھی بہت زیادہ فائدہ مند ہے۔اس میں متعدد غذائی اجزا موجود ہوتے ہیں جن میں وٹامن سی نمایاں ہے مگر اس کے ساتھ ساتھ متعدد اینٹی آکسائیڈنٹس بھی اس پھل کا حصہ ہوتے ہیں۔

روانہ ایک امرود کھانے کے چند فوائد درج ذیل ہیں۔

قبض سے تحفظ

امرود کا ایک خاص جز فائبر ہے جو نظام ہاضمہ کے لیے بہت اہم ہوتا ہے۔

ایک امرود سے دن بھر کے لیے درکار فائبر کی 12 فیصد مقدار حاصل ہوتی ہے جبکہ اس کے بیج جلاب جیسا اثر کرتے ہیں جس سے قبض سے نجات یا اس کی روک تھام میں مدد ملتی ہے۔

مدافعتی نظام مضبوط بنائے

امرود میں وٹامن سی کی مقدار کافی زیادہ ہوتی ہے اور یہ وٹامن مدافعتی نظام کے لیے بہت اہم ہوتا ہے۔

تحقیقی رپورٹس سے ثابت ہوا ہے کہ وٹامن سی سے موسمی بیماریوں سے بچنے یا ان کا دورانیہ کم کرنے میں مدد ملتی ہے۔

ذیابیطس کے مریضوں کے لیے مفید

فائبر سے بھرپور ہونے کی وجہ سے یہ پھل ذیابیطس کے مریضوں کے لیے نقصان دہ نہیں ہوتا کیونکہ اس کے کھانے سے بلڈ شوگر کی سطح میں تیزی سے اضافہ نہیں ہوتا۔

اسی طرح اس میں موجود فائبر بلڈ شوگر کو کنٹرول کرنے میں مددگار ثابت ہوسکتا ہے، البتہ بہت زیادہ کھانے سے گریز کرنا چاہیے۔

مزید پڑھیے  ویکسین سے متعلق منفی اثرات معمولی نوعیت کے رپورٹ ہوئے،ڈاکٹر فیصل

دل کو صحت مند بنائے

امرود سے جسم میں سوڈیم اور پوٹاشیم کا توازن بہتر ہوتا ہے جس سے بلڈ پریشر کو کنٹرول کرنا آسان ہوجاتا ہے۔

اسی طرح یہ پھل خون میں چکنائی یا کولیسٹرول کی سطح بھی کم کرنے میں مددگار ثابت ہوسکتا ہے جس سے امراض قلب سے تحفظ ملتا ہے۔

بینائی کے لیے بھی فائدہ مند

اس پھل میں وٹامن اے بھی موجود ہوتا ہے جو بینائی کے لیے اہم ہوتا ہے۔

وٹامن اے سے عمر  بڑھنےکے ساتھ بینائی میں آنے والی تنزلی کا خطرہ کم ہوتا ہے جبکہ دیگر امراض سے بھی تحفظ ملتا ہے۔

جسمانی توانائی میں اضافہ اور تناؤ دور کرے

امرود میں موجود میگنیشم سے مسلز اور اعصاب کو سکون پہنچتا ہے جس سے دن بھر کی مصروفیات کے بعد سکون کا احساس ہوتا ہے، تناؤ کم ہوتا ہے جبکہ جسمانی توانائی بڑھتی ہے۔

جسمانی وزن میں کمی

امرود کھانے کی عادت سے میٹابولزم کو بہتر بنانے میں مدد مل سکتی ہے ۔

اس پھل کو کھانے سے پیٹ بھرنے کا احساس دیر تک برقرار رہتا ہے جس سے بے وقت کھانے کی عادت سے نجات ممکن ہوتی ہے جس سے بھی جسمانی وزن میں کمی لانا کچھ آسان ہوجاتا ہے۔

بڑھتی عمر کے اثرات کی روک تھام

امردو میں وٹامن اے، وٹامن سی اور اینٹی آکسائیڈنٹس جیسے کیروٹین وغیرہ کی موجودگی سے جلد کو جھریوں سے پاک رکھنے میں مدد مل سکتی ہے۔

حاملہ خواتین کے لیے مفید

امرود فولیٹ کے حصول کا اچھا ذریعہ ہے جس سے بچے میں پیدائش نقص کا خطرہ کم ہوتا ہے، جبکہ اس میں موجود فولک ایسڈ بچے کے اعصابی نظام کی نشوونما کے لیے مددگار ثابت ہوتا ہے۔

مزید پڑھیے  مہنگائی سے نمٹنے کے لیے تمباکو پر ٹیکسوں میں اضافہ صحت اور خوشحالی کا راستہ ہے، ظہیر قریشی

دماغی افعال کو متحرک کرے

امرود میں وٹامن بی 3 اور بی 6 موجود ہوتے ہیں جو ذہنی صحت کے لیے فائدہ مند وٹامنز ہیں۔

وٹامن بی 6 سے دماغی تنزلی اور ڈپریشن کا خطرہ کم ہوتا ہے۔

مسلز کو سکون ملتا ہے

اس پھل میں موجود میگنیشم صحت کے لیے بہت مفید غذائی جز ہوتا ہے۔

اس غذائی جز سے مسلز اور اعصاب کو سکون پہنچتا ہے جس سے دن بھر کی سرگرمیوں سے طاری ہونے والی تھکاوٹ میں کمی آتی ہے اور توانائی میں اضافہ ہوتا ہے۔

جِلد کو جھریوں سے بچائے

امرود وٹامن اے، وٹامن سی اور اینٹی آکسائیڈنٹس جسیے کیروٹین سے بھرپور پھل ہے جس سے جِلد کو جھریوں سے تحفظ ملتا ہے۔

یہی وجہ ہے کہ روزانہ ایک امرود کھانے سے جِلد کو طویل عرصے تک جوان رکھنے میں مدد مل سکتی ہے۔

Back to top button