بسم اللہ الرحمن الرحیم

بین الاقوامی

القاعدہ کے سربراہ ایمن الظواہری کی نئی ویڈیو منظر عام پر آگئی

سائٹ کا کہنا تھا ایمن الظواہری نے 20 سالہ جنگ کے بعد افغانستان سے امریکی انخلا کی نشان دہی بھی کی۔

القاعدہ کے سربراہ ایمن الظواہری نے سانحہ 11 ستمبر 2001 کی 20 ویں برسی کے موقع پر نئی ویڈیو جاری کر دی جبکہ چند ماہ قبل ان کے انتقال کی اطلاعات تھیں۔

رپورٹ کے مطابق جہادی ویب سائٹس پر نظر رکھنے والے انٹیلی جنس گروپ سائٹ کا کہنا تھا کہ القاعدہ سربراہ کی نئی ویڈیو ہفتے کو جاری کی گئی ہے۔

رپورٹ کے مطابق ویڈیو میں ایمن الظواہری کا کہنا تھا کہ ‘یروشلم کبھی بھی یہودی مرکز نہیں رہے گا’ اور رواں برس جنوری میں شام میں روسی فوجیوں کو نشانہ بنانے سمیت القاعدہ کے حملوں کی تعریف کی۔

سائٹ کا کہنا تھا ایمن الظواہری نے 20 سالہ جنگ کے بعد افغانستان سے امریکی انخلا کی نشان دہی بھی کی۔

گروپ کا کہنا تھا کہ ضروری نہیں ہے کہ یہ ریکارڈنگ تازہ ہو کیونکہ طالبان کے ساتھ انخلا کا معاہدہ فروری 2020 میں ہوا تھا۔

سائٹ کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ایمن الظواہری طالبان کے افغانستان اور گزشتہ ماہ کے کابل میں قبضے کے حوالے سے کوئی بات نہیں کی لیکن انہوں نے یکم جنوری کو شام کے شہر رقعہ میں روس کے فوجیوں پر حملے کا حوالہ دیا۔

خیال رہے کہ ایمن الظواہری کے حوالے سے 2020 کے اواخر سے افواہیں تھیں وہ بیماری کا شکار ہو کر انتقال کر گئے ہیں اور گزشتہ روز سامنے آنے والی ویڈیو تک ان کے زندہ ہونے سے متعلق کوئی ویڈیو یا تصویری ثبوت نہیں ملا تھا۔

سائٹ کی ڈائریکٹر ریٹا کیٹز نے ٹوئٹر پر لکھا کہ ‘ہوسکتا ہے ان کی موت ہوئی ہو، اگر ایسا ہے تو جنوری 2021 یا اس کے بعد کسی موقع کی ہے’۔

مزید پڑھیے  معروف براڈکاسٹر اورکالم نگار عظیم سرور انتقال کرگئے

ایمن الظواہری کی تقریر 61 منٹ اور 37 سیکنڈ پر مشتمل ہے اور اس کو القاعدہ کے الصحاب میڈیا فاؤنڈییشن نے تیار کی ہے۔

Back to top button